معیشت

قطع نظر مرد یا عورت ہونے کے اپنے کام کی تنخواہ ذاتی ملکیت ہوا کرتی ہے۔ 18سال کی عمر سے اوپر سب اپنی معیشت کے حقدار ہیں۔ یعنی اپنی رقم اور بینک میں ذاتی کھاتہ ہو، جس تک کسی اور کی رسائی نہ ہو۔ معیشت میں با قائدگی معاشی آزادی بخشتی ہے۔

جوپیسہ آپ خود کماتے ہیں اس پہ تصرف آپ کا حق ہے۔ یہ بھی اہم ہے کہ آپ کو اپنی معیشت کا اندازہ ہو بشمول دیگرے بجٹ بنانے کے ذریعہ سے۔ باوجویکہ آپ شادی شدہ ہوں پھر بھی میاں بیوی دونوں کو خاندان کے حساب کتاب کا علم ہونا چاہئے، بصورتِ طلاق یا آپ میں سے ایک کو کچھ ہو جائے توآپ کو معاشی معاملات کاعلم ہو۔  شادی شدہ جوڑے پرایک دوسرے اور بچوں کی کفالت کا فرض عائد ہوتا ہے۔

18 سال سے اوپر تمام افراد کو معائدوں پہ دستخط کرنے کا حق ہے، مثلاً یہ بینک سے ادھار کے کاغذات یا ایک خریداری کا معائدہ ہو سکتا ہے۔ تحریری معائدے پرعمل لازم ہوتا ہے اس لئے آپ کو علم ہونا چاہیئے کہ آپ کس پہ دستخط کر رہے ہیں تا کہ آپ کسی ایسے فریضہ کی ذمہ داری نہ لے لیں جس کے لئے آپ کے پاس رقم نہ ہو۔

شادی شدہ جوڑے خاندان کی قیمتی اشیاء کی مشترکہ ملکیت رکھ سکتے ہیں، مثلاً اگر وہ کار یا گھر خریدتے ہیں۔ شوہر اور بیوی دونوں کو چایئے کہ وہ معائدے کو بغور پڑھیں، یہ بہت اہم ہے کہ دونوں خریداری کے معائدوں پر دستخط کریں۔

رابطہ

کہاں سے مدد حاصل کی جا سکتی ہے؟

ملک بھر میں قانونی امداد نامی ادرے پائے جاتے ہیں۔ قانونی امداد کی جگہ پہ آپ کو قانونی اور معیشت کے متعلق بھی مشورہ دیا جاتا ہے۔ یہ قانونی امداد مفت ہوتی ہے یا اسکی قیمت بہت کم ہوتی ہے اور آپ کو اپنا نام نہیں بتانا پڑتا ہے۔ آپ انٹر نیٹ پہ تلاش کرنے سے اپنی رہائش گاہ کے قرب وجوار میں واقع   قانونی امداد ڈھونڈ سکتے ہیں

 

حقوق و فرائض

اگر آپ کی عمر 18 سال سے اوپر ہوتو آپ بینک میں کھاتہ کُھلوانے کے حقدار ہیں، جس تک کسی اور کی رسائی نہ ہو۔

آپ کا ایک نم کنٹو(NemKonto) ہونا چاہئے، تا کہ آجر، سرکار یا کمیون آپ کو رقم منتقل کر سکے۔

جو رقم آپ کماتے ہیں اس پہ تصرف آپ کا حق ہے۔ 

اگر آپ کی عمر18 سال سے زیادہ ہے تو آپ معائدوں پہ دستخط کر سکتے ہیں، مثلاً بینک سے ادھار یا  ایک خریداری کا معائدہ۔

جس بات پر آپ دستخط کرتے ہیں توآپ کا حق اور فرض ہے کہ اس بارے میں آپ کو علم ہو۔ یہ اہم ہے، کیونکہ جب آپ دستخط کر دیتے ہیں تو تحریری معائدے قابلِ پابندی ہوتے ہیں۔ اگر آپ زبان کی وجہ سے معائدے کو نہ سمجھ سکتے ہوں، تو آپ کو چاہئے کہ معائدے کا ترجمہ کرنے اور سمجھنے کے لئے کسی کی مدد لیں۔

آپ اور آپ کی/کے شریک حیات پہ ایک دوسرے اور اپنے بچوں کی کفالت کا فرض ہے۔

جب آپ شادی کرتے ہیں،تو آپ اور آپ کی/کے رفیقِ حیات کی ملکیت مشترکہ ہوتی ہے۔ مشترکہ ملکیت اُن تمام اشیاء کا بھی احاطہ کرتی ہے جو شادی سے پہلے آپ کی انفرادی ملکیت تھیں۔ وہ ایک مکان ہو سکتا ہے یا ذاتی خریدا ہوا فلیٹ، موٹرکار، بچت کی رقم، موسیقی سننے کے آلات یا زیور ہو سکتے ہیں مشترکہ ملکیت ان اشیاء کا احاطہ کرتی ہے جو آپ شادی کے بعد خریدی یا حاصل کی ہو یعنی اشیاء وراثت، انعامات یا تحائف وغیرہ۔

باوجودیکہ آپ شادی شدہ ہیں اوراثاثہ جات مشترکہ ہیں پھر بھی آپ اپنی ملکیت کے بارے میں خود طے کر سکتے یعنی:

  • وہ اثاثے جو شادی کرتے وقت آپ کی ذاتی ملکیت تھے
  • وہ اثاثے جو آپ نے شادی کے دوران مہیا کئے
  • تنخواہ کی آمدن یا بےروزگاری الاؤنس- تاہم شادی شدہ جوڑے پر ایک دوسرے کی کفالت فرض ہے
  • وہ اثاثے جو شادی کےدوران آپ کو وراثت یا تحائف کی شکل میں ملے ہوں

مشترکہ اثاثہ جات عمومی طور پہ طلاق یا فوتیدگی کی صورت میں اہمیت کے حامل ہوتے ہیں۔

 
 
 

پی ڈی ایف کو سیو کریں لنک بھیجیں